Makkhi Ki Waja Se Jannat Aur Jahannam Ka Faisala | مکھی اور جہنم | Urdu Islamic Story

Makkhi Ki Waja Se Jannat Aur Jahannam Ka Faisala Urdu Islamic Story

حضور ؐ نے فرمایا ۔ ایک آدمی صرف ایک مکھی کی وجہ سے جہنم میں چلا گیا اور دوسرا جنت میں داخل ہو گیا ۔ صحابہ اکرام نے پوچھا ۔ یا رسول ؐ وہ کیسے ؟

حضور ؐ نے ارشاد فرمایا ۔ دو آدمی ایک قبیلے کے پاس سے گزر رہے تھے ۔ اس قبیلے میں ایک بُت تھا جس کی سب قبیلے والے عبادت کرتے تھے اور کوئی بھی شخص اس بُت پر چڑھاوا چڑھائے بغیر اس قبیلے سے نہیں گزر سکتا تھا ۔ چنانچہ وہ دونوں آدمی بھی اس قبیلے کے پاس سے گزرنے لگے تو انہیں بھی بُت کو چڑھاوا چڑھانے کے لئیے کہا گیا ۔

ان میں سے ایک شخص نے کہا کہ میرے پاس ایسا کچھ نہیں ہے جس کا چڑھاوا چڑھاؤں ۔ تو قبیلے والوں نے کہا کہ کچھ بھی چڑھا دو خواہ یہاں سے پکڑ کر کوئی مکھی ہی چڑھا دو۔

اس شخص نے ایسا ہی کیا ۔ اس نے وہاں سے مکھی پکڑ کر بُت پر چڑھاوا چڑھا دیا۔ تو لوگوں نے اسے جانے دیا ۔ چنانچہ وہ اس چڑھاوے کی وجہ سے جہنم میں چلا گیا۔

قبیلے کے لوگوں نے دوسرے آدمی سے کہا کہ تم بھی کوئی چیز بُت کی نذر کرو۔ اس شخص نے کہا کہ میں اللہ عزوجل کے علاوہ کسی دوسرے کے نام کا چڑھاوا نہیں چڑھاؤں گا۔ قبیلے والوں نے غصے میں آ کر اسے قتل کر دیا۔ وہ شخص اپنے ایمان کی وجہ سے جنت میں چلا گیا۔